نواز شریف کی عدلیہ مخالف تقاریر سپریم کورٹ میں چیلنج

عدلیہ مخالف تقاریر اور جی ٹی روڈ ریلی کے دوران گاڑی کے نیچے آکر جاں بحق بچے کے قتل کا مقدمہ نواز شریف کیخلاف درج کرنے کیلئے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کر دی گئی۔

ذرائع کے مطابق سپریم کورٹ رجسٹری لاہور شہری محمود اختر کی جانب سے دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ سپریم کورٹ کے پانچ رکنی بینچ میں شامل معزز ججز کو نوازشریف توہین آمیز الفاظ استعمال کرکے پکار رہے ہیں اور فیصلے پر تنقید کرنے کے بجائے سپریم کورٹ پرتنقید کررہے جو توہین عدالت کے مترادف ہے، نواز شریف نے نااہلی کو سازش قرار دے کر سپریم کورٹ کو سازش کا ذمہ دار ٹھہرایا ہے جو عدلیہ کی تضحیک کے مترادف ہے۔

درخواست میں مزید کہا گیا ہے کہ ریلی میں موجود گاڑی کی ٹکر سے بارہ سالہ بچہ بھی جاں بحق ہوا ہے جس کے ذمہ دار نواز شریف ہیں، درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ عدلیہ مخالف تقاریر کرنے پر نواز شریف کیخلاف کارروائی کی جائے اور جاں بحق بچے کے قتل کا مقدمہ نواز شریف کیخلاف درج کیا جائے۔